FREE SHIPPING | On order over Rs. 1000 within Pakistan

Kashf ul Mahjoob | اردو ترجمہ | کشف المحجوب

In Stock Unavailable

sold in last hours

Regular price Rs.780.00 |  Save Rs.-780.00 (Liquid error (sections/product-template.liquid line 159): divided by 0% off)

-1

Spent Rs. more for free shipping

You have got FREE SHIPPING

ESTIMATED DELIVERY BETWEEN and .

PEOPLE LOOKING FOR THIS PRODUCT

PRODUCT DETAILS

کشف المحجوب | تصوف کی مایہ ناز کتاب
حضرت علی ہجویری المعروف داتا گنج بخش رحمۃ اللہ علیہ
 اردو ترجمہ.مترجم: ابو الحسنات علامہ سید محمد احمد قادری
.
.
"کشف المحجوب" سے اقتباس
میں سوچتا تھا کہ جب میں نے روحانی تعلیم کا راستہ چن لیا تو مجھے صوفی طریقے کے مطابق وہ لباس پہننا پڑا جس کہ کھردرے ٹاٹ کا بنا تھا اور بہت معمولی سامان کے ساتھ زندگی گزارنا پڑی کہ نبی کریم نے اپنی زندگی نہایت سادگی اور کم سامان سے بسر کی تھی اور ان کا کل اثاثہ انتہائی کم تھا ان کا معایر زندگی اپنے زمانے کے سب سے نچلے طبقے یعنی غلاموں کی سطح پر تھا یہی بات صوفی اپناتے ہیں اور اپنا معیار زندگی بہت سادہ اور معاشرے کے کمزور اور محروم طبقے کی سطح پرلاتے ہیں۔ اس موقع پر میرے دل میں سوال پیدا ہوا کہ جب میں نے اتنی کم سطح پر رہنا ہے تو مجھے چپ چاپ ایک تنہا جگہ پر یاد الہی کرنا چاہیئے لوگوں سے میل ملاب کی کیا ضرورت ہے مجھے یہ سوال تنگ کرتا تھا کہ صوفی لوگوں سے راہ و رسم کیوں رکھتے ہیں ۔ میں اس سے پہلے بھی ایک مسئلے سے دوچار ہوا تھا اور میں نے کئی دن حضرت شیخ ابو یزید کے مزار پر کئی دن تفکر کیا تھا تو مجھے اپنے سوال کا جواب ملا تھا اس دفعہ بھی میں نے حضرت شیخ ابو یزید رحمتہ اللہ علیہ کی خانقاہ میں جا کر کے اس پر غور وفکر کرنا شروع کیا تین ماہ تک میں ان کی خانقاہ میں اس معاملے کے بارے غور و فکر کرتا رہا۔ ہر روز تین مرتبہ غسل کرتا رہا۔ اور تیس دفعہ وضو کرتا رہا۔ لیکن میری یہ مشکل حل نہ ہوئی۔ بالآخر میں نے خراسان جانے کا ارادہ کیا اور راستے میں رات کے وقت ایک خانقاہ میں رات بسر کرنے کے لیے ٹھہرا۔ وہاں لوگوں کی ایک جماعت بھی تھی۔ میرے پاس اس وقت موٹے کھُردرے ٹاٹ کی ایک گودڑی تھی۔ اور وہی میں نے پہن رکھی تھی۔ ہاتھ میں ایک عصا اور کوزہ (لوٹا) تھا۔ اس کے سوا اور کوئی سامان میرے پاس نہیں تھا۔ ان لوگوں نے مجھے بہت حیرت کی نظر سے دیکھا۔ اور اپنے خاص انداز میں ایک دوسرے سے کہا کہ یہ ہم میں سے نہیں ہے۔ اور وہ اپنی اس بات میں سچے تھے، کیونکہ میں فی الواقع ان میں سے نہ تھا۔ میں تو محض ایک مسافر کی حیثیت سے رات بسر کرنے کے لیے ان کے پاس پہنچ گیا تھا۔ ورنہ ان کے طور طریقوں سے میرا کوئی سروکار نہ تھا۔ انھوں نے خانقاہ کے نیچے کے ایک کمرہ میں مجھے بٹھا دیا۔ اور ایک سُوکھی روٹی اور وہ بھی روکھُی میرے آگے رکھ کر خود کھانے کے لیے اوپر چوبارہ میں جا بیٹھے۔ جو کھانے وہ خود کھا رہے تھے ان کی خوشبو مجھے آ رہی تھی۔ اور اس کے ساتھ چوبارہ پر سے وہ مجھ سے باتیں کرتے تھے۔ جب وہ کھانے سے فارغ ہوئے تو خربوزے کھانے لگے۔ اور چھلکے میری طرف پھینکتے رہے۔ایسا معلوم ہوتا تھا کہ ان کی طبیعت کی خوشی اس وقت میرا تمخسر اڑانے پر موقوف تھی۔ میں اپنے دل میں خدا سے کہہ رہا تھا، بارِ خدایا، اگر مجھے صبر دے اور توفیق دے کہ میں ان حرکات کو برداشت کروں۔ میں اسے خداوند تعالٰیٰ کی طرف سے ابتلا سمجھ کر برداشت کر رہا تھا، اس لیے جس قدر وہ طعن وملامت مجھ پر زیادہ کرتے تھے میں خوش ہوتا تھا۔ یہاں تک کہ اس طعن کا بوجھ اٹھانے سے مجھے اپنے اس مسئلے کا، جس کے لیے میں مجاہدوں اور اس سفر کی مشقت اٹھا رہا تھا جواب مل گیا۔ اور اسی وقت مجھ کو معلوم ہو گیا کہ صوفیا کرام دوسرے لوگوں کے درمیان درمیان کیوں رہتے ہیں اور ان کا بوجھ کس لیے اٹھاتے ہیں۔ نیز یہ کہ بعض بزرگوں نے ملامت کا طریقہ کیوں اختیار کیا ہے؟ کیوں کہ تب مجھے معلوم ہوا کہ سچی انکساری لوگوں کے درمیان رہنے سے حاصل ہوتی ہے وگرنہ آدمی غرور میں متبلا ہوتا ہے کہ میں کوئی خاص آدمی ہوں جس نے اللہ کے لئے دوسرے لوگوں کو چھوڑ دیا ہے اور دوسرے کے طعن سہنے سے انسان میں اعلی ظرفی اور اپنے نصب العین سے وابستگی میں اضافہ ہوتا ہے اور وہ جان جاتا ہے کہ لوگوں کی ملامت سہنا اس لئے ضروری ہے کہ ہم کوئی خاص شخصیت نہیں بلکہ عام اور عاجز انسان ہیں اور ہم نے جو طرز زندگی اپنایا ہے اس کامقصد دوسروں سے الگ ہونا نہیں بلکہ دوسروں کے ساتھ رہ کر اپنے طرز فکر کے مطابق زندگی گزارنا ہے۔واقعہ یہ ہے کہ اس سے بعض اوقات وہ عقدے حل ہو جاتے ہیں جو دوسرے طریقوں سے حل نہیں ہوتے۔
حضرت علی ہجویری المعروف داتا گنج بخش رحمۃ اللہ علیہ
کی کتاب "کشف المحجوب" سے اقتباس

Recently Viewed Products

Kashf ul Mahjoob | اردو ترجمہ | کشف المحجوب

Returns

There are a few important things to keep in mind when returning a product you have purchased from Dervish Online Store:

Please ensure that the item you are returning is repacked with the original invoice/receipt.

We will only exchange any product(s), if the product(s) received has any kind of defect or if the wrong product has been delivered to you. Contact us by emailing us images of the defective product at help@dervishonline.com or calling us at 0321-8925965 (Mon to Fri 11 am-4 pm and Sat 12 pm-3 pm) within 24 hours from the date you received your order.

Please note that the product must be unused with the price tag attached. Once our team has reviewed the defective product, an exchange will be offered for the same amount.


Order Cancellation
You may cancel your order any time before the order is processed by calling us at 0321-8925965 (Mon to Fri 11 am-4 pm and Sat 12 pm-3 pm).

Please note that the order can not be canceled once the order is dispatched, which is usually within a few hours of you placing the order. The Return and Exchange Policy will apply once the product is shipped.

Dervish Online Store may cancel orders for any reason. Common reasons may include: The item is out of stock, pricing errors, previous undelivered orders to the customer or if we are not able to get in touch with the customer using the information given which placing the order.


Refund Policy
You reserve the right to demand replacement/refund for incorrect or damaged item(s). If you choose a replacement, we will deliver such item(s) free of charge. However, if you choose to claim a refund, we will offer you a refund method and will refund the amount in question within 3-5 days of receiving the damaged/ incorrect order back.

What are you looking for?

Your cart